Kashmir Issue and PM Imran Khan's Role - Insaf Blog | Pakistan Tehreek-e-Insaf
Kashmir Issue and PM Imran Khan's Role

 

'' مسئلہ اور وزیراعظم عمران خان کا کردار '' 

25 جولائی 2018 کو پاکستان تحریک انصاف پاکستان کے جنرل الیکشن میں واضح برتری کے ساتھ پاکستان میں پہلی بار  اپنی حکومت بنانے کے قابل بنی ،22 جولائی 2018 کو وزیراعظم عمران خان نے وکٹری سپیچ میں یہ واضح کہا کہ ہم بھارت سمیت سب ممالک کے ساتھ دوستانہ تعلقات چاہتے ہیں تمام مسائل پر مل بیٹھ کر بات کرنے کے لیے تیار ہیں اگر بھارت ایک قدم بڑھائے گا تو ہم دو قدم آگے جائیں گے ہم جنگ نہیں امن کے خواہش مند ہیں 
اس کے بعد وزیراعظم عمران خان نے متعدد بار کوشش کی کہ کسی طرح بھارت بات چیت کرنے پر راضی ہو جائے کیونکہ انڈیا میں الیکشن ہونے جا رہے تھے تو مودی نہیں چاہتا تھا کہ مجھے کوئی نقصان پہنچے اور اس نے اپنی پوری الیکشن کمپئن پاکستان کے خلاف بیانات پر کی۔۔۔پلوامہ واقعہ مودی کی خود کی گئی سازش کا نتیجہ تھا اس کے فوراً بعد بالا کوٹ پر حملہ کرنے کی ناکام کوشش کی گئی لیکن وہاں بھی مودی کو منہ کی کھانی پڑی یہ سب مودی انڈیا میں ہونے والے الیکشن کا ماحول بنانے کے لیے کر رہا تھا پاکستان نے بھارت کی ائیرفورس کے پائلٹ کو گرفتار کیا اور تیسرے دن اسے واہگہ بارڈر پر انڈین حکام کے حوالے کر کے وزیراعظم عمران خان نے دنیا کو یہ واضح پیغام دے دیا کہ ہم امن کے خواہشمند ضرور ہیں لیکن اپنی سالمیت پر کبھی کوئی سمجھوتہ نہیں کریں گے وزیراعظم عمران خان کے اس فعل کو دنیا نے سہرایا،انڈیا میں الیکشن ہوئے اور مودی پھر بھارت کا پردھان منتری بن گیا 
5 اگست 2019 کو مودی سرکار سے کشمیریوں سے ان کی پہچان زبردستی چھینتے ہوئے آرٹیکل 70 کو ختم کرنے کا اعلان کیا تو پورا کشمیر یک زباں ہو گیا کہ "ہم نہیں مانتے ظلم کے یہ ضابطے " مودی سرکار نے فوراً پوری مقبوضہ وادی میں کرفیو لگا دیا اور مزید بھارتی فوج کشمیر میں تعینات کر دی چنانچہ دنیا نے دیکھا پھر کس طرح کشمیریوں پر ظلم کے پہاڑ ڈھائے گئے پوری دنیا خاموش تھی لیکن ایک عمران خان تھا جو اس وقت کشمیریوں کی آواز بنا اور خود کو لقب دیا "کشمیریوں کا سفیر" 
وہ دن اور آج کا دن وزیراعظم عمران خان نے کوئی انٹرنیشنل فورم نہیں چھوڑا جہاں کشمیریوں کی آواز بلند نہ کی ہو یہاں تک کہ دنیا کے سب سے طاقتور ملک کے صدر ڈولنڈ ٹرمپ سے اپنی پہلی ملاقات میں مسئلہ کشمیر اٹھایا ،یو این جنرل اسمبلی کے اجلاس میں کشمیریوں کی بہترین نمائندگی کی اور دنیا کو مودی اور آر ایس ایس کا مکرو چہرہ دکھایا اور پھر مظفرآباد آزادکشمیر میں یکجہتی کشمیر جلسے سے خطاب میں وزیراعظم عمران خان نے واضح الفاظ میں کہا کہ کشمیریوں کو ریفرنڈم کا حق دیا جائے اور ہم اس کے لیے تیار ہیں تاکہ کشمیری اپنے بہتر مستقبل کا فیصلہ کر سکیں ۔۔۔
25 ستمبر 2020 کو وزیراعظم عمران خان نے پھر اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس سے ویڈیو لنک کے ذریعے خطاب کیا جہاں ایک بار پھر کشمیریوں کی حمایت میں کسی مسلمان ملک کے لیڈر نے آواز بلند کی ۔۔۔
وزیراعظم عمران خان نے تقریباً دس منٹ تک مسئلہ کشمیر اور مودی سرکاری اور آر ایس ایس کی اقلیتوں کے ساتھ کی جانے والی زیادتیاں دنیا کے سامنے رکھیں ،وزیراعظم عمران خان ایک مرتبہ پھر دنیا سے کہا بھارت کو روکا جائے ورگرنہ دو ایٹمی ملک اگر جنگ کی طرف گئے تو پوری دنیا اس کی لپیٹ میں آئے گی وزیراعظم عمران خان ایک بار پھر دو ٹوک الفاظ میں دنیا کو بتا دیا کہ جب تک مقبوضہ کشمیر کے ہمارے مسلمان بہن بھائیوں کے ان کا حق نہیں دیا جاتا پاکستان کشمیریوں کی ہر طرح کی حمایت جاری رکھیں گے

Tags:Imran Khan