Dear Maryam! Don't Put People's Lives At Risk- Insaf Blog | Pakistan Tehreek-e-Insaf
Dear Maryam - Don't Put The Public On Risk- Insaf Blog

 

عالمی سطح پر پھیلنے والی بے قابو کورونا وائرس نے پوری دنیا کو ہلا کر رکھ دیا ہے ۔ پوری دنیا چلا رہی ہے احتیاط کریں۔ کورونا سے اپنے گھر والوں کو اور خود کو محفوظ رکھیں۔  صورتحال کی سنگینی کا اندازہ لگائیں کہ بھارت میں انتہا پسند ہندوؤں نے مسلمانوں سے دعا کی اپیل کی ۔

ہر ملک میں حکومت اور اپوزیشن مل کر عوام سے ایس او پیز پر سختی سے عمل کرنے کی اپیل کر رہے ہیں۔ ہر عوامی رہنما اور لیڈر اپنے اپنے ملک میں نقصانات کو کم سے کم رکھنے کے لئے خدمات انجام دے رہے ہیں اور لوگوں کو احتیاط برتنے کیلئے اجتماعی طور پر اپیلیں کر رہے ہیں کیونکہ عالمی سطح پر ایک ہی رائے ہے کہ احتیاط میں عافیت ہے۔

پاکستان میں حکومتی سطح پر کورونا کو پھیلنے سے روکنے کے لئے اٹھائے گئے اقدامات کو پوری دنیا میں سراہا گیا مگر پاکستانیوں کی بد قسمتی دیکھیں کہ اس ملک میں مریم صفدر اعوان جیسی ایک خود ساختہ لیڈر بھی پائی جاتی ہے جو پاکستان اور پاکستانی عوام کا دشمن یہ پورا خاندان وطن عزیز کو دہائیوں سے مختلف بھیس بدل کر نقصان پہنچا رہے ہیں۔ اقتدار میں آکر قومی خزانے کو انتہائی بے دردی سے لوٹا۔ عوامی فلاح و بہبود کے منصوبوں کی  آڑ میں تجوریاں بھر دیں اور ملکی دولت کو بیرون ممالک منتقل کر کے ملک کی جڑیں کاٹنے میں مصروف تھے۔خاندان کے بیرون ملک اثاثے اور کاروبار بڑھتے گئے اور ملک مقروض ہوتا گیا۔
بالآخر رسوائی ذلت و رسوائی مقدر بنی اور اقتدار سے بے دخل ہوئے تو ریاستی اداروں پر ٹوٹ پڑے ۔ مجھے کیوں نکالا جیسے نعرے لگائے گئے ۔ ووٹ کو عزت دو کے نعرے کی  آڑ میں عوام کو بےوقوف بنانے کی ناکام کوشش کی ۔

پھر ملک سے فرار ہونے کے لئے اس ڈرامے باز خاندان کے بڑے میاں نے بیماری کا ڈرامہ رچایا۔ اب بڑے میاں کے بعد مریم صفدر بیرون ملک فرار ہونے کے چکر میں مدہوش اوچھے ہتکھنڈوں پر اتر آئی ہیں اور سادہ لوح عوام کی جانیں خطرے میں ڈال کر اور زندگیوں سے کھیل کر فرار کے راہ کی متلاشی ہے۔ اس طرز عمل سے ثابت ہوا ہے کہ اس خاندان کو ملک و قوم، غریب پاکستانیوں اور حتیٰ کہ عوام کی جانوں کی پرواہ نہیں ۔ ان کو صرف ذاتی مفادات عزیز ہیں۔


مریم صفدر اعوان نے کل لاہور میں عوامی اجتماع کا اہتمام کیا اور وہ بھی ایسے ایریا میں جہاں وائرس کی پرسنٹیج زیادہ ہے۔


مریم صفدر کو اتنا بھی اندازہ نہیں ہے کہ وہ جو سیاسی مقاصد حاصل کرنا چاہتی ہیں وہ ذاتی مفادات کے حصول کے لئے ہیں مگر عوام کی جان کو خطرے میں ڈال کر ذاتی مفادات کے حصول کی کوشش کرنا کتنا بڑا ظلم ہے۔ حکومت سے اپیل ہے کہ اس طرح عوام کی جانیں خطرے میں ڈالنے سے مریم صفدر کو روکا جائے ورنہ عوام الناس کو پیغام جائے گا کہ حاکم بدہن ریاست اس خاندان کے سامنے بے بس ہے اور ان کو قانون کے ساتھ کھیلنے کی کھلم کھلا اجازت ہے جو عمران خان کے ویژن کے بالکل برعکس ہے ۔