خیبر پختونخوا پولیس کی اب تک کی کارکردگی : ایک تفصیلی جائزہ | Pakistan Tehreek-e-Insaf

پختونخوا پولیس کی کارکردگی 

آٹھ نئے سکول چار سال میں بنائے گئے 
1. تحقیقاتی سکول 
2. ہنر مندی اور تکنیکی معاملات کا سکول 
3. ٹریفک کو منظم کرنے کا سکول 
4. انٹیلی جینس کا سکول 
5. آئی ٹی کا سکول 
6. عوام میں افرا تفری پھیلنے پر اسکو قابو پانے کے طریقے سکھانے کا سکول 
7. بارود سے نمٹنے کے طریقے سکھانے کا سکول 
8. ایلیٹ ٹریننگ سکول 

ان سکولوں سے اب تک 17000 سے زائد افسران ٹریننگ حاصل کر چکے ہیں 

جھگڑے حل کرنے کے مقامی جرگوں کا قیام جنہوں نے سال 2014 سے لے کر اب تک 17000 تنازعات باہمی رضا مندی سے حل کئے 

پولیس اسسٹنٹ لائنز نے26 جنوری 2016 سے اب تک چار لاکھ سے زائد شہریوں کی مدد کی 

اقدامات: 

  •  پولیس ایکٹ 2017 
  • دہشتگردی سے نمٹنے کا خصوصی ادارہ ، قیام 2014 میں ہوا 
  • سراغ رساں کتوں کا یونٹ 
  • بم ڈسپوزل یونٹ
  • خصوصی کمبیٹ یونٹ 
  • ریپڈ رسپانس یونٹ 
  • ایلیٹ خواتین کمانڈوز 
  • ٹریفک وارڈن 
  • سٹی پٹرول 
  • پولیس رسائی سروس : تقریبا 6000 شکایات کا ازالہ آئی جی پولیس نے خود کیا 

تمام تبادلے اور تقرریاں صرف آئی جی پولیس کے ہاتھ میں 

عوامی تحفظ کے کمیشن کا قیام جو کہ صوبائی اور ضلعی سطح پر ہے ، جس میں حکومتی نمایندے ، اپوزیشن ارکان، ایم پی اے ، مقامی رہنما ، خواتین ، اقلیتیں ، ریٹائر جج اور انسانی حقوق کے لیے کام کرنے والے لوگ شامل ہیں 
دہشتگردی سے نمٹنے کے خصوصی ادارے سی ٹی ڈی نے 15000 سے زائد دہشت گردوں کو گرفتار کیا جن میں سے 167 دہشت گردوں کے سر پر انعام کی قیمت تھی ، 

نیشل ایکشن پلان کے تحت پختونخوا پولیس کی جانب سے جو کاروائی کی گئی : 

* کل گھر جن کی تلاشی لی گئی = 1076676 
* کل پرچے جو کرایہ دار کا اندراج نہ کروانے پر ہوئے = 38155
* ہوٹل مالکان کے خلاف ہوٹل میں قیام کرنے والوں کی جانچ پڑتال نہ کرنے پر جو ایف آئی آرز درج ہوئیں =4875


* کل ایف آئی آرز جو تعلیمی اداروں کے خلاف ناقص سکیورٹی انتظامات کرنے پر درج کی گئیں =11222
* کل ایف آئی آرز جو مختلف انتظامی اداروں کے خلاف ناقص سکیورٹی انتظامات پر درج کی گئیں = 7813
* کل افغانی جو باقاعدہ رجسٹریشن نہ ہونے کی وجہ سے گرفتار کئے گئے = 35590
* نفرت انگیز مواد جس پر پابندی لگائی گئی = 1651
* نفرت انگیز مواد پھیلانے والے جو لوگ گرفتار کئے گئے =  364
* لاوڈ سپیکر کے غلط استعمال پر درج کی جانے والی ایف آئی آرز : 7408 ، کل لوگ جو گرفتار کئے گئے : 7731

سرچ اور سٹرائیک آپریشن 
* کل آپریشن :  41223
* کل گرفتاریاں :  203552
* ہتھیار  : 54271
* اسلحہ:  1638534
* دھماکے کا مواد :  1612 کلو 

سنیپ چیکنگ : 

* کل سنیپ چیکنگ پوائنٹ :  208523
* کل گرفتاریاں :  450691
* ہتھیار : 29850
* اسلحہ: 951149
* دھماکے کا مواد:  33 KGs

* دہشت گردی کے کیس جن کی پیروی کی گئی اور ان کو چیلنج کیا گیا :  1112
* مسلحہ افراد جو گرفتار ہوئے :  1631
* ان دہشت گردوں کی ہلاکت جن کے سر کی قیمت مقرر تھی : 174 

Category:
خیبر پختونخوا پولیس