PTI NEWS (MPA)SHOAIB SIDDIQUI 13-1-2017

Sunday, 15 January 2017 22:47 | READ 806 TIMES Written by 
RATE THIS ITEM
(0 votes)


میاں میر ہسپتال میں سہولتوں کے فقدان پر تحریک انصاف کی طرف سے تحریک التوئے کار
ہسپتالوں میں مریض مر رہے ہیں ،پنجاب حکومت کی ترجیح ہیلتھ نہیں:ایم پی اے شعیب صدیقی
لاہور۔13جنوری :۔( )تحریک انصاف کی طرف سے میاں میر ہسپتال میں طبی سہولتوں کے فقدان پر پی ٹی آئی کی طرف سے پنجاب اسمبلی میںتحریک التوائے کارجمع کرا دی گئی ہے ایم پی اے شعیب صدیقی نے اپنی تحریک میں کہا ہے کہ ان کے حلقے پی پی 147میں اُس وقت کے صوبائی وزیر عبدالعلیم خان کی کاوشوں سے گورنمنٹ میاں میر کی تعمیر شروع کی گئی جس کو پنجاب حکومت نے10سال کے طویل عرصے کے بعد مکمل فنکشنل نہیں کیا 135بیڈ کے اس ہسپتال کی 2007/8میں منظوری ہوئی اس کےلئے اس وقت کی حکومت نے440ملین روپے رکھے ،ان میںسے 387ملین روپے سے بلڈنگ مکمل کی گئی بقیہ 53ملین روپے سے مشینری اور آلات لیے جانے تھے لیکن کچھ نہیں خریدا گیا شعیب صدیقی نے کہا کہ یہاں سٹاف مکمل ہے اور سالہا سال سے تنخواہیں لے رہا ہے ہسپتال میں صرف آو ¿ٹ ڈور کی نا مکمل سہولت فراہم کی جا رہی ہے یہاں ایمرجنسی سمیت کوئی دوسرا شعبہ ہسپتال فنکشنل نہیں ہے ہسپتال میں بیڈ ز،ادویات ، مشینری ، آلات اور بنیادی ٹیسٹوں کی سہولت ہی میسر نہیں کی گئی مفاد عامہ کے اس اہم ترین منصوبے سے حکومت کی جانب سے چشم بوشی سے میرے حلقے کے عوام میں انتہائی پریشانی ، اضطراب اور غم و غصہ پایا جا تا ہے ایم پی اے شعیب صدیقی نے مطالبہ کیا تھا کہ میاں میر ہسپتال کو فوری طور مطلوبہ طبی سہولتیں مہیا کی جائیں تا کہ اس علاقے کے مریضوں کو علاج معالجے کی مناسب سہولتیں حاصل ہو سکیں ۔
٭٭٭