CM KPK Presiding over 7th Information Technology Board Meeting

Tuesday, 01 August 2017 08:10 | READ 578 TIMES Written by 
RATE THIS ITEM
(0 votes)


ہینڈ آؤٹ نمبر1 پشا ور۔ 31 جولائی2017 ء
وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا پرویز خٹک نے حکمرانی اور ترقی کے پرانے اور روایتی طور طریقوں کو چھوڑ کر حکمرانی کے پورے ڈھانچے کو جدید علوم کے ذریعے جدید دور کے مطابق بنانے پر زور دیا ہے ۔جدید علوم کو اپنا کر ہم ترقی کا پہیہ تیز اور لوگوں کی خوشحالی یقینی بنا سکتے ہیں۔نوجوانوں کو جدید اور انفارمیشن ٹیکنالوجی کے علم سے بہرہ ور کرنا وقت کی ضرورت ہے ۔اس کے لئے تسلسل سے کوشش درکار ہو گی ۔ہمیں ڈیجٹیل دُنیا سے ہم آہنگ ہو نا ہے اور سی پیک کے تناظر میں یہی خیبرپختونخوا کا روشن مستقبل ہے۔وہ وزیراعلیٰ ہاؤس میں انفارمیشن ٹیکنالوجی کے ساتویں اجلاس کی صدارت کر رہے تھے اجلاس میں گزشتہ میٹنگ کے حوالے سے بھی بات کی گئی اور اس موقع پر آئی ٹی کے ذریعے خود روزگاری کے حوالے سے کئی اہم فیصلے بھی کئے گئے جن میں چھ مہینے نوجوانوں کیلئے وظیفہ پشاور ، مردان، سوات، ہری پور، صوابی اور بنوں میں درشل پراجیکٹس متعارف کرناشامل ہے جس میں سوات مکان باغ پراجیکٹ شروع کرنے کیلئے تیار ہے ۔ اجلاس میں رشکئی ٹیکنالوجی سٹی پراجیکٹ کے تحت 250 تعلیمی یافتہ نوجوانوں کو چائنہ بھیجنے کی منظوری دی گئی یہ تعلیم یافتہ نوجوان چائنہ کے مختلف انڈسٹریل پارکس بھیجے جائینگے جس کے لئے باقاعدہ اشتہار شائع کئے جائینگے اجلاس میں صوبے کے 25 سکولوں میں آئی ٹی سے متعلق فری لانسنگ پراجیکٹ پر بھی اطمینان کا ا ظہار کیا گیا۔ جس میں سرٹیفیکیٹس کورسز سکولوں میں آئی ٹی لیبز اور آئی ٹی سے متعلق دیگر علوم شامل ہیں۔ نوجوانوں کو کاروبار کرنے کیلئے انٹر نیٹ کی سہولت بھی دی جائیگی۔
اجلاس میں ٹیلی میڈیسن سنٹر، کے پی سائبر ایمرجنسی رسپانس سنٹر، شہریو ں کی سہولت کیلئے ٹیکنیکل اینڈ فنانشل فیزیبلٹی سنٹر کے قیام کی منظوری دی۔ جس کی ٹیکنیکل بورڈ نے پہلے سے منظوری دی تھی۔ وزیراعلیٰ نے کے پی سائبر ایمرجنسی رسپانس سنٹر کیلئے پروفیشنل کی تعیناتی پر بھی رضامندی ظاہر کر دی اسکے علاوہ وزیراعلیٰ نے ڈیجیٹل کمپلکس پشاور ، منی ٹیکنالوجی سٹیٹ ایبٹ آباد اور رشکئی سپیشل اکنامک زون میں ٹیکنیکل سٹی پر بھی اطمینان کا اظہار کیا اجلاس میں پشاوربس ریپڈمنصوبے کیلئے26 کلو میٹر ڈارفائبر کی بھی منظوری دی گئی۔ اجلاس میں عوام کی سہولت کیلئے مختلف پبلک سیکٹرزکو آپس میں ملانے کیلئے ڈیٹاٹرانسفر کرنے پر بھی اطمینان کا اظہار کیا گیا۔ اجلاس میں آئی ٹی بورڈ کیلئے بجٹ کی منظوری دی گئی اور اس کے علاوہ آئی ٹی بورڈ کے دستورالعمل، ایچ آر کمیٹی اور ٹیکنکل کمیٹی بنانے پر بھی اطمینان کا اظہار کیا گیا۔ اجلاس میں پروکیورمنٹ اور انفراسٹر کچر کمیٹی بنانے کی بھی توثیق کردی گئی، اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعلیٰ نے کہا کہ ہم ڈیجیٹل دنیا میں رہ رہے ہیں۔ لیکن بد قسمتی سے جدید علوم حاصل کرنے میں پیچھے ہیں۔ ہیں جدید علوم میں مہارت حاصل کرنا ہوگاکیونکہ بین الاقوامی معیشت اب جدید علوم پر استوار ہے اور سی پیک کے ذریعے ہم بھی بین الاقوامی معیشت سے منسلک ہو رہے ہیں سی پیک کے تناظر میں ہمیں اپنی نئی نسل کو جدید علوم سے روشناس کرنے کے علاوہ دوسرا آپشن نہیں ہے۔ پرویز خٹک نے کہا کہ ان کی حکومت نے پہلے ہی سے فرسودہ نظام تعلیم کو جدید تعلیم میں تبدیل کرنے کیلئے حکمت عملی بنائی ہے جدیدیت کے مطابق ہمیں اپنی نئی نسل کی صلاحیتوں کو نکھارنا ہوگا تا کہ دنیا کے ساتھ قدم بہ قدم چل سکے۔ وزیراعلیٰ نے رولز آف بزنس بنانے کے احکامات جاری کرتے ہوئے سٹرٹیجک سپورٹ یونٹ کے سربراہ صاحبزادہ سعیدکو اس کی دیکھ بھال کرنے کی ہدایت کی۔ وزیراعلیٰ نے پہلے سے تعینات ملازمین کی مستقلی پر رضامندی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ بورڈ خود مختار ہے اور فیصلہ کرنے میں ازاد ہے۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ حکومت خودمختار اداروں کے معاملات میں مداخلت کے حامی نہیں ہے۔ وزیراعلیٰ نے آئی ٹی بورڈ کو ہر قسم سپورٹ کی یقین دہانی کراتے ہوئے کہا کہ حکومت نے بورڈ کی ہر قسم کی فنانشل مدد کئے اور اب ان کی ذمہ داری ہے کہ وہ آمدنی شروع کریں۔ وزیراعلیٰ نے بورڈ کو ہدایت کی کہ وہ مستقبل کیلئے پلان کی تیاری کر کے آنے والے اجلاس میں زیر بحث لائے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔